معدے کی جلن اور تیزابیت ختم آسان ترین طریقے

معدے کی جلن اور تیزابیت عام پائے جانے الے مسائل میں سےایک ہیں اور اس کے حل کے لیے ادویات کا استعمال مزید مسائل کا باعث بن سکتا ہے اس مسئلے کو سادہ اور آسان طریقہ سے حل کرنے کے لیے مندرجہ ذیل تدابیر اختیار کی جا سکتی ہیں سب سے پہلے تو یہ معلوم کر یں کہ آپ کو کن کی وجہ سے جلن اور تیزابیت کا سا منا کر نا پڑ تا ہے ۔

عام طور پر مصالحہ دار غذائیں تر شادہ پھل چائے کافی اور چکنا ئی والی غذائی اس مسئلے کا سبب بنتی ہیں پنیر اور تلی ہوئی اشیاء سے پر ہیز کر یں اور کم چربی والا گوشت اور پھل سبز یاں استعمال کر یں وزن کم کر یں کیونکہ معدے کے گرد جمع ہونے والا وزن تیزابیت کو اوپر کی جانب منتقل کر تا ہے کھا نا کم مقدار میں زیادہ دفعہ کھا ئیں اس طرح معدے میں تیزابیت کی مقدار کم ہو جا تی ہے۔تیزابیت ہو جا نے کی صورت میں مندرجہ ذیل اقدامات کر یں ۔ چائے۔ کافی۔ اور کولڈ ڈرنک کا استعمال بند کر دیں روزانہ نیم گرم پانی کا ایک گلاس پئیں کیلے، تر بوز اور کھیرے کو روزمرہ غذا کا حصہ بنا ئیں۔

تر بوز کا جوس بھی بہت مفید ہے ۔ ناریل کا پانی بھی تیزابیت کم کرتا ہے روزانہ ایک گلاس دودھ پئیں۔ رات کا کھانا سونے سے دو یا تین گھنٹہ پہلے کھا لیں۔ کھانوں کی مقدار مختصر اور درمیانی وقفہ محدود رکھیں کھا نا باقاعدگی سے کھا ئیں۔ اچار مصالحے دار چٹنی اور سر کے سے پر ہیز کر یں لونگ کو کچھ دیر چوسنے سے بھی افاقہ محسوس ہو گا گڑ لیموں کیلا اور بادام معدے کی جلن اور تیزابیت میں فوری افاقہ دینے کی لیے مشہور ہیں۔ عام طور پر معدے میں تیزابیت کی وجہ کھانے کے درمیان طویل وقفہ، خالی پیٹ ہونا یا بہت زیادہ چائے، کافی یا تمباکو نوشی کا استعمال وغیرہ ہوتا ہے۔

جب تیزابی سیال معمول سے زیادہ ہوجائے تو سینے میں جلن یا تیزابیت کا احساس ہوتا ہے سونف کچھ ماہرین کی رائے ہے کہ کھانے کے بعد کچھ مقدار میں سونف چبانا معدے میں تیزابیت کی روک تھام میں مدد دیتا ہے۔ سونف کی چائے غذائی نالی کو صحت مند رکھتی ہے جبکہ یہ مشروب بدہضمی اور پیٹ پھولنے کے خلاف بھی فائدہ مند ہےیہ مصالحہ معدے کی تیزابیت کے خلاف کام کرتا ہے اور معدے کی صحت ہاضمے اور غذا کو جذب کرنے میں مدد دے کر کرتا ہے۔ معدے میں تیزابیت کو دور کرنے کے لیے دار چینی کی چائے مفید ثابت ہوتی ہے۔لونگ قدرتی طور پر غذائی نالی میں گیس کو پیدا ہونے سے روکتی ہے، الائچی اور لونگ کو کچل کر کھانا بھی معدے میں تیزابیت کا علاج کرتا ہے۔

اور سانس کی بو سے بھی نجات دلاتا ہے۔زیرہ بھی معدے میں تیزابیت کو معمول پر رکھنے میں مددگار مصالحہ ہے جو کہ ہاضمے میں مدد دینے کے ساتھ پیٹ کے درد کو بھی کم کرتا ہے۔ ایک چائے کا چمچ زیرہ ایک کپ ابلتے ہوئے پانی میں ڈال کر ہر کھانے کے بعد کھانا عادت بنالیں ادرک کے متعدد طبی فوائد ہیں، یہ ہاضمے کے لیے بہترین اور ورم کش ہوتی ہے۔ معدے کی تیزابیت کم کرنے کے لیے ایک ٹکڑا ادرک چبالیں یا کچھ مقدار میں ادرک ابلتے ہوئے پانی کے کپ میں ڈالیں اور پی لیں۔جب ناریل کا پانی پیا جاتا ہے تو تیزابی سطح الکلائن میں بدل جاتی ہے، جبکہ ایسے جز کی مقدار بھی معدے میں بڑھتی ہے جو اسے اضافی تیزابیت کے نقصان دہ اثرات سے بچاتا ہے۔ یہ پانی چونکہ فائبر سے بھرپور ہوتا ہے اس لیے تیزابیت کو ابھرنے سے روکتا بھی ہے۔کیلے میں ایسے اجزاءہوتے ہیں جو تیزایبت کو پھیلنے سے روکتے ہیں۔ یہ معدے کی تیزابیت سے نجات کے لیے انتہائی آسان ٹوٹکا ہے، یعنی روزانہ صرف ایک کیلا کھانا بھی تیزابیت سے ہونے والی تکلیف کی روک تھام کرتا ہے

About admin

Check Also

انشاء اللہ قیامت تک کوئی بیماری نہیں لگے گی یہ کلمہ صرف 1بار پڑھ لیں 99بیماریوں سے فوری شفاء

آج ہر انسان پریشان ہے کسی کو جانی پریشانی ہے تو کسی کو مالی پریشانی …

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *